Sunday , 21 July 2019
Home / Regional News / لیڈی ڈاکٹر کی غفلت ، لا پر واہی اور پیسوں کی لالچ نے شریف شہری کو بیوی سے محروم کر دیا ۔ پریس کلب کے سامنے احتجاج۔

لیڈی ڈاکٹر کی غفلت ، لا پر واہی اور پیسوں کی لالچ نے شریف شہری کو بیوی سے محروم کر دیا ۔ پریس کلب کے سامنے احتجاج۔

[pukhto]چارسدہ(بیورو رپورٹ) لیڈی ڈاکٹر کی غفلت ، لا پر واہی اور پیسوں کی لالچ نے شریف شہری کو بیوی سے محروم کر دیا ۔ لیڈی ڈاکٹر نرگس مشتاق کی نجی ہسپتال میں بچی کی پیدائش کے بعد بیوی کی حالت حالت غیر ہو گئی لیکن زچکی کی دس ہزار روپے فیس میں صرف دو ہزار روپے کی کمی کی وجہ سے لیڈی ڈاکٹر نے زندگی اور موت کی کشمکش میں مبتلا خاتون کو نومولود بچی سمیت چالیس منٹ تک روکے رکھا جس کی وجہ سے خون ضائع ہونے کی وجہ سے خاتون موت کی منہ میں چلی گئی۔ لواحقین کا پریس کلب اور لیڈی ڈاکٹر کے نجی ہسپتال کے سامنے احتجاجی مظاہرہ ۔تفصیلات کے مطابق عمرزئی سے تعلق رکھنے والے بدر عالم نے خاندان اور اہل علاقہ کے ہمراہ لیڈی ڈاکٹر نرگس مشتاق کے مبینہ غفلت ، لا پر واہی اور نجی ہسپتال میں سہولیات کے فقدان کی وجہ سے خاتون کی ہلاکت کے خلاف چارسدہ پریس کلب اورمذکورہ لیڈی ڈاکٹر کے نجی ہسپتال کے سامنے زبر دست احتجاجی مظاہرہ کیا ۔ بعد ازاں چارسدہ پریس کلب میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے عمر زئی کے رہائشی بد ر عالم نے خاندان کے دیگر افراد کے ہمراہ پر ہجوم پریس کانفرنس سے خطاب کر تے ہوئے کہا کہ لیڈی ڈاکٹر نرگس مشتاق نے چار جون کو اپنے نجی ہسپتال میں میری بیوی کا طبی معائینہ کیا اور 13جولائی کوزچکی کی تاریخ دے دی ۔ انہوں نے کہا کہ13جولائی کولیڈی ڈاکٹر نرگس مشتاق نے کہا کہ نارمل ڈیلیوری ہے اور زچکی کیلئے آپریشن کی کوئی ضرورت نہیں مگر زچگی کے بعد بلیڈنگ شروع ہو گئی اور لیڈی ڈاکٹر نرگس مشتاق کے پرائیوٹ ہسپتال میں بلڈ بینک ، ایمبولینس ، آکسیجن اور جان بچانے والی دیگر ادویات موجود نہ تھے اور نہ ہمیں اس حوالے سے باخبر رکھا گیا ۔انہوں نے کہا جب میری بیوی کی خالت غیر ہو گئی تو ہمیں اطلاع دے دی کہ مریضہ کو فوری طور پر لیڈی ریڈنگ ہسپتال پشاور منتقل کریں۔مریض کو پشاور منتقل کرنے کیلئے گاڑی کا انتظام کیا گیا تو لیڈی ڈاکٹرنے اپنے فیس دس ہزارروپے میں سے دو ہزار روپے کی کمی کی وجہ میری بیوی کو تشویشناک خالت کے باجود ہسپتال میں چالیس منٹ تک روکے رکھا ۔ انہوں نے کہا کہ جیب میں پیسے نہ ہونے کی وجہ سے انہوں نے موٹر سائیکل گروی رکھنے کی پیشکش کی لیکن لیڈی ڈاکٹر نہ مانی جبکہ دوسری جانب مریضہ زندگی اور موت کی کشمکش میں مبتلاتڑپتی رہی۔ بدر عالم کا کہنا تھا کہ پیسوں کی وجہ سے مزید چالیس منٹ کی تاخیر کے بعد جب مریضہ کو لیڈی ریڈنگ ہسپتال پشاور منتقل کرنے کیلئے روانہ کیا تو وہ ہسپتال پہنچنے سے پہلے ہی دم توڑ گئی ۔ انہوں نے کہا کہ لیڈی ڈاکٹر کی غفلت، لاپرواہی ، ہسپتال میں بنیادی سہولیات کے فقدان اور پیسوں کی حوس اور لالچ نے اسے اپنی بیوی سے محروم کر دیا۔ دوسری طرف جب اس حوالے سے لیڈ ی ڈاکٹر نرگس مشتاق کا موقف لینے کے لئے صحافیوں نے ان کے ہسپتال کا دورہ کیا تو ہسپتال پر ایک مہینہ بند رہنے کا نوٹس چسپاں کیا گیا تھا ۔ متاثرہ شہری نے وزیر اعلیٰ خیر پختون خوا، سیکرٹری و ڈائیریکٹرہیلتھ ،اورڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر سے مطالبہ ہے کہ مذکورہ ڈاکٹر کے خلاف قتل کا مقدمہ درج کیا جائے اور ان کا لائسنس منسوح کیا جائے ۔ [/pukhto]

Check Also

انسانیت سوز واقعہ نے انسانیت کے سر شرم سے جھکا دئیے ۔لڑکی نے منگنی ٹوٹنے پر سابق منگیتر کے دو بچوں کو قتل کر دیا ۔

شیخو پورہ میں انسانیت سوز واقعہ نے انسانیت کے سر شرم سے جھکا دئیے ۔شیخو …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *