Sunday , 21 July 2019
Home / Regional News / چارسدہ میں مسائل کا جن بوتل سے نکل آیا

چارسدہ میں مسائل کا جن بوتل سے نکل آیا

[pukhto]چارسدہ (بیورورپورٹ) چارسدہ کے تاجروں نے ضلعی انتظامیہ کے ناجائز جر مانوں ، امن و امان کی بگڑتی ہو ئی صورتحال اور ٹریفک پولیس کے ظلم و جبر کے خلاف پیر کے روز احتجاجی مظاہرے ، ہڑتالی کیمپ اور جیل بھر و تحریک شروع کرنے کا اعلان کر دیا ۔ تاجروں سے 14اگست کے تقریبات اور عیدالضحیٰ کیلئے جرمانوں کے آڑ میں بھاری رقومات وصول کئے گئے ۔ ضلعی انتظامیہ صوبائی حکومت کے خلاف عوام میں نفرتیں پید ا کر رہی ہے ۔ بیورو کریسی اےئر کنڈیشن گاڑیوں میں بیٹھ کر تاجروں کو اشارے سے بلا کر بھاری جرمانے وصول کر تے ہیں جو انسانیت کی تذلیل ہے ۔ میاں مفرق شاہ ۔ تفصیلات کے مطابق تنظیم تاجران کا اجلاس زیر صدارت صدر میاں مفرق شاہ منعقد ہوا۔ اجلاس میں جنرل سیکرٹری حاجی رحیم خان ، ممتاز حسن ، حاجی اقبال ، حاجی یحیٰ جان ، حاجی فلک شیر ، مصنف شاہ ، ارشد علی اور دیگر نے شرکت کی ۔ اجلاس میں ضلعی انتظامیہ کے ناجائز جر مانوں ، امن و امان کی بگڑتی ہوئی صورتحال اور ٹریفک پولیس کے غیر انسانی رویہ پر تفصیلی غور و خوض کیا گیا ۔ اجلا س میں اس امر پر سخت تشویش کا اظہار کیا گیا کہ ضلعی انتظامیہ آئے روز بازاروں میں چھاپے لگا کر تجاوزات کے آڑ میں تاجروں پر بے جا جر مانے لگا رہے ہیں۔ اےئر کنڈیشن گاڑیوں میں ضلعی انتظامیہ کے افسران پولیس موبائل کے ہمراہ گشت کر تے ہیں اور تاجروں کو اشارے سے گاڑی طلب کرکے ان کو جرمانہ ادا کرنے کے احکامات دئیے جاتے ہیں جو ایک غیر انسانی اور غیر اخلاقی فعل ہے ۔ تاجر وں کے ٹیکسوں سے ریاستی ادارے چلتے ہیں اور بیورو کریسی سمیت تمام سرکاری ملازمین عوام کی خدمت کیلئے ہوتے ہیں مگر ضلعی بیورو کریسی کا رویہ تاجروں سے آقا اور غلام سے بھی زیادہ بد تر ہوتا ہے۔ ضلعی انتظامیہ نے 14اگست کے تقریبات کے اخراجات پورے کرنے کیلئے تاجروں سے جرمانوں کے آڑ میں رقومات بٹور لئے جبکہ عید سے پہلے بھی اخراجات پورے کرنے کیلئے ضلعی بیورو کریسی نے تاجروں سے بھاری جرمانے وصول کئے ۔ اجلاس میں واضح کیا گیا کہ پولیس منشیات اور جوئے کے اڈوں ، رہزنوں اور چوروں کی بجائے شریف تاجروں اور شریف لوگوں کو تنگ کر رہی ہے جبکہ دوسری طرف واپڈا پولیس کی اندھیر نگری چوپٹ راج سے بھی تاجر پریشان ہیں اور آئے روز تاجروں کو مختلف بہانوں سے واپڈا تھانے طلب کرکے بے جا جر مانے وصول کئے جا رہے ہیں۔ ٹریفک پولیس کی وجہ سے تاجروں کا کاروبار ختم ہو رہا ہے ۔ خان خوانین اور بااثر لوگوں کی گاڑیاں سڑک پر کئی کئی گھنٹے تک کھڑی رہتی ہے جبکہ خریداروں کی گاڑیوں کو ٹریفک پولیس لفٹر کے ذریعے اٹھا تے ہیں۔ اجلاس میں یہ بات واضح کی گئی کہ تاجر برادری ناجائز تجاوزات کے خاتمے کیلئے خود کوشش کر رہی ہے مگر ضلعی انتظامیہ تہہ بازاری کے آڑ میں تاجروں کے دوکانوں کے سامنے ہتھ ریڑی والوں کو اجازت دے رہے ہیں جس سے ٹریفک کا نظام درہم برہم ہو جا تا ہے ۔ اجلا س میں متفقہ طو رپر فیصلہ کیا گیا کہ تین روز کے اندر اندر ضلعی انتظامیہ نے تاجروں سے وصول کئے گئے ناجائز جرمانے واپس نہ کئے اور تاجروں سے امتیازی سلوک بند نہ کیا تو پیر کے روز سے جیل بھرو تحریک ، احتجاجی مظاہرے اور فاروق اعظم چوک میں احتجاجی کیمپ لگایا جا ئیگا۔ [/pukhto]

Check Also

انسانیت سوز واقعہ نے انسانیت کے سر شرم سے جھکا دئیے ۔لڑکی نے منگنی ٹوٹنے پر سابق منگیتر کے دو بچوں کو قتل کر دیا ۔

شیخو پورہ میں انسانیت سوز واقعہ نے انسانیت کے سر شرم سے جھکا دئیے ۔شیخو …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *