Tuesday , 23 July 2019
Home / Urdu News / کلاس فور ملازمین ڈیوٹی کی بجائے کالج کے سامنے خود ساختہ کارپارکنگ چلانے اور پیسے اکٹھا کرنے میں مصروف ۔

کلاس فور ملازمین ڈیوٹی کی بجائے کالج کے سامنے خود ساختہ کارپارکنگ چلانے اور پیسے اکٹھا کرنے میں مصروف ۔

[pukhto]




گورنمنٹ کامرس کالج چارسدہ میں سینکڑوں طلباء طالبات کی زندگی داؤ پر لگ گئی ۔ سیکورٹی گارڈ غائب ۔ کلاس فور ملازمین ڈیوٹی کی بجائے کالج کے سامنے خود ساختہ کارپارکنگ چلانے اور پیسے اکٹھا کرنے میں مصروف ۔ طلباء کی شکایت کے باجود ڈائریکٹر جنرل کامر س ایجو کیشن کی غفلت اور لا پر واہی جاری ۔تفصیلات کے مطابق گورنمنٹ کامرس کالج نوشہرہ روڈ چارسدہ میں پڑھنے والے سینکڑوں طلباء کی زندگی داؤ پر لگ گئی ہے ۔ پرائیوٹ عمارت میں قائم گورنمنٹ کامر س کالج چارسدہ میں اس وقت سینکڑوں طلباء کالج میں زیر تعلیم ہے جبکہ سینکڑوں طلباء کا امتخان جاری ہے ۔ صحافیوں کی ٹیم نے مذکورہ کالج کی سیکورٹی کا جائزہ لینے کیلئے کالج کا دورہ کیا اورسیکورٹی انتظامات کا جائزہ لیا ۔ مشاہدے کے دوران یہ بات سامنے آگئی کہ واچ ٹاور میں کوئی سیکورٹی گارڈ موجود ہی نہیں جبکہ غیر متعلقہ لوگوں کے کالج اندر جانے پر بھی کوئی چیک نہیں ۔ کالج کے باہر مذکورہ کامرس کالج کے کلاس فور ملازمین غیر قانونی اور خود ساختہ کارپارکنگ قائم کرکے طلباء سے پیسے اکٹھے کرنے میں مصروف تھے۔ غیر قانونی کار پارکنگ کے حوالے سے کالج کے طلباء نے ڈائریکٹر جنرل کامر س ایجوکیشن کو 21اگست کو تحریری در خواست بھی دی ہے مگر اس پر ابھی تک کوئی کاروائی نہیں ہو ئی ۔ اس حوالے سے کالج پرنسپل نور زمان نے اپنے موقف میں کہا کہ سرکاری طور پر کالج کیلئے کوئی سیکورٹی فراہم نہیں کی گئی ۔ کالج کی خفاظت اور طلباء کی زندگی محفوظ بنانے کیلئے کالج کے کلاس فور ملازمین ڈیوٹی کے بعد کالج گیٹ کے سامنے کارپارک چلا رہے ہیں کیونکہ اس حوالے سے ہم نے متعدد ٹھیکہ داروں سے بھی رابطہ کیا مگر کوئی اس کیلئے تیار نہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ کالج میں آج کل امتخانات ہو رہے ہیں اور کسی بھی طالب علم کو کالج کے اندر گاڑی یا موٹر سائیکل داخل کرنے کی اجازت نہیں دی ۔انہوں نے کہاکہ کالج ترقی کی راہ پر گامزن ہے مگر بعض عناصر کالج کی ترقی نہیں چاہتے ۔



[/pukhto]

Check Also

خوست جامع مسجد میں دھماکہ۔ 28 افراد جان بحق 38 زخمی۔

افغانستان میں خوست میں واقعہ آرمی کے جامع مسجد میں نماز عصر کے دوران زور …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *